(Zarb-e-Kaleem-039) (قلندر کی پہچان) Qalander Ki Pehchan

قلندر کی پہچان

کہتا ہے زمانے سے یہ درویش جواں مرد
جاتا ہے جدھر بندئہ حق، تو بھی ادھر جا!

ہنگامے ہیں میرے تری طاقت سے زیادہ
بچتا ہوا بنگاہ قلندر سے گزر جا
بنگاہ: مقام۔
میں کشتی و ملاح کا محتاج نہ ہوں گا
چڑھتا ہوا دریا ہے اگر تو تو اتر جا

توڑا نہیں جادو مری تکبیر نے تیرا؟
ہے تجھ میں مکر جانے کی جرات تو مکر جا!

مہر و مہ و انجم کا محاسب ہے قلندر
ایام کا مرکب نہیں، راکب ہے قلندر

English Translation:

قلندر کی پہچان

کہتا ہے زمانے سے یہ درویش جواں مرد
جاتا ہے جدھر بندئہ حق، تو بھی ادھر جا!

THE RECOGNITION OF A QALANDAR
A Darwesh bold proclaims with main and might my guidance take, tread path quite straight and right.
ہنگامے ہیں میرے تری طاقت سے زیادہ
بچتا ہوا بنگاہ قلندر سے گزر جا
بنگاہ: مقام۔
Beyond your might and nerves my tumults lie, with caution great by Qalandar’s dwelling hie.
میں کشتی و ملاح کا محتاج نہ ہوں گا
چڑھتا ہوا دریا ہے اگر تو تو اتر جا

The help of skiff and guide I do not need, if you are swollen brook, come down with speed.
توڑا نہیں جادو مری تکبیر نے تیرا؟
ہے تجھ میں مکر جانے کی جرات تو مکر جا!

Has not my Takbir broke your charm? Revoke, if show of courage does not harm.
مہر و مہ و انجم کا محاسب ہے قلندر
ایام کا مرکب نہیں، راکب ہے قلندر

A Darvesh holds the reins of Time like steed; ile brings sun, stars and moon to book with speed.
(Translated by Syed Akbar Ali Shah)

Comments are closed.

Blog at WordPress.com.

Up ↑

%d bloggers like this: