(Zarb-e-Kaleem-042) (کفر و مومن) Kafir-o-Momin

کافر و مومن

کل ساحل دریا پہ کہا مجھ سے خضر نے
تو ڈھونڈ رہا ہے سم افرنگ کا تریاق؟
سم: زہر۔
اک نکتہ مرے پاس ہے شمشیر کی مانند
برندہ و صیقل زدہ و روشن و براق
برندہ: کاٹنے والا۔
صیقل زدہ: صیقل کیا ہوا، چمکایا ہوا۔
براق: بجلی کی طرح چمکیلا۔
کافر کی یہ پہچان کہ آفاق میں گم ہے
مومن کی یہ پہچان کہ گم اس میں ہیں آفاق

English Translation:

کافر و مومن

کل ساحل دریا پہ کہا مجھ سے خضر نے
تو ڈھونڈ رہا ہے سم افرنگ کا تریاق؟
سم: زہر۔
THE INFIDEL AND BELIEVER
Thus Khizr to me did speak last day on river banks. ‘Are you in search of cure for venom spread by Franks’?
اک نکتہ مرے پاس ہے شمشیر کی مانند
برندہ و صیقل زدہ و روشن و براق
برندہ: کاٹنے والا۔
صیقل زدہ: صیقل کیا ہوا، چمکایا ہوا۔
براق: بجلی کی طرح چمکیلا۔
I know a subtle point which like the sword is keen is cutting, burnished, bright and owns a peculiar sheen.
کافر کی یہ پہچان کہ آفاق میں گم ہے
مومن کی یہ پہچان کہ گم اس میں ہیں آفاق

A heathen gets distinct by getting lost in life whereas a Muslim true keeps ‘bove its brawl and strife.
(Translated by Syed Akbar Ali Shah)

Comments are closed.

Blog at WordPress.com.

Up ↑

%d bloggers like this: