(Zarb-e-Kaleem-161) (سیاست افرنگ) Siasat-e-Afrang

سیاست افرنگ

تری حریف ہے یارب سیاست افرنگ
مگر ہیں اس کے پجاری فقط امیر و رئیس

بنایا ایک ہی ابلیس آگ سے تو نے
بنائے خاک سے اس نے دو صد ہزار ابلیس


 

اس چھوٹی سی نظم میں اقبال نے ہمیں بڑے دلپذیر انداز میں یہ بتایا ہے کہ فرنگی سیاست سراسر شیطانی کاروبار ہے اس نظم کا اسلوب بیان اس لیے موثر ہو گیا ہے کہ اقبال نے خدا سے خطاب کیا ہے کہتے ہیں کہ

اے خدا! یہ مغربی سیاست بھی خدائی کی مدعی ہے فرق اتنا ہے کہ تیری پرستش امیراور غریب دونوں کرتے ہیں، لیکن اس کے بچاری صرف امیر اور رئیس ہیں اور دوسرا فرق یہ ہے کہ تم نے آگ سے صرف ایک ابلیس بنایا لیکن اس سیاست نے خاک سے لاکھوں ابلیس بنا ڈالے مطلب یہ ہے کہ ہر فرنگی سیاستداں، شیطان کا مرید ہے اور اللہ کا منکر ہے.

%d bloggers like this:
search previous next tag category expand menu location phone mail time cart zoom edit close