(Bang-e-Dra-187) (دلیل مہر و وفا اس سے بڑھ کے کیا ہو گی) Daleel-e-Meher-o-Wafa Iss Se Barh Ke Kya Ho Gi

دلیل مہر و وفا اس سے بڑھ کے کیا ہوگی

دلیل مہر و وفا اس سے بڑھ کے کیا ہوگی
نہ ہو حضور سے الفت تو یہ ستم نہ سہیں

مصر ہے حلقہ،کمیٹی میں کچھ کہیں ہم بھی
مگر رضائے کلکٹر کو بھانپ لیں تو کہیں
مصر: بضد، اسرار کرنے والا۔
سند تو لیجیے، لڑکوں کے کام آئے گی
وہ مہربان ہیں اب، پھر رہیں، رہیں نہ رہیں

زمین پر تو نہیں ہندیوں کو جا ملتی
مگر جہاں میں ہیں خالی سمندروں کی تہیں

مثال کشتی بے حس مطیع فرماں ہیں
کہو تو بستہ ساحل رہیں، کہو تو بہیں
کشتي بے حسي: بے حس کشتی۔
مطيع فرماں: فرمانبردار ۔
بستہ ساحل: ساحل سے چمٹے رہنا۔

Comments are closed.

Blog at WordPress.com.

Up ↑

%d bloggers like this: