(Bang-e-Dra-194) (محنت و سرمایہ دنیا میں صف آرا ہو گئے) Mehnat-o-Sarmaya Dunya Mein Saff Ara Ho Gye

محنت و سرمایہ دنیا میں صف آرا ہو گئے

محنت و سرمایہ دنیا میں صف آرا ہو گئے
دیکھے ہوتا ہے کس کس کی تمنائوں کا خون
صف آرا: صفیں باندھ کر کھڑے ہو گئے ؛ اشارہ ہے سرمایہ داری اور اشتراکی نظام کی طرف۔
حکمت و تدبیر سے یہ فتنہ آشوب خیز
ٹل نہیں سکتا، وقد کنتم بہ تستعجلون
اقبال قرآنی آیہ سے یہ مفہوم پیدا کرتے ہیں کہ اس کا تو علم نہیں کہ ان دونوں کے مابین جو جنگ ہو گی اس میں کون جیتے گا اور کون ہارے گا البتہ یہ طے ہے کہ اس جنگ میں دونوں طاقتوں کی بہت سی تمناؤں کا خون ہو جائے گا۔
کھل گئے، یاجوج اور ماجوج کے لشکر تمام
چشم مسلم دیکھ لے تفسیر حرف ینسلون

Comments are closed.

Blog at WordPress.com.

Up ↑

%d bloggers like this: